خبریںدنیا سے

او آئی سی کا بھارت میں شہریت کی متنارع قانون سازی پر تشویش کا اظہار

ویب ڈیسک: اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) نے شہریت کے حقوق پر قانون سازی اور بابری مسجد کے حالیہ معاملات پر تشویش کا اظہار کیا ہے جس سے بھارت کی مسلمان اقلیت متاثر ہو رہی ہے۔
او آئی سی کے جنرل سیکرٹریٹ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ اسلامی تعاون تنظیم مسلمانوں کو متاثر کرنے والے حالیہ واقعات پر گہری نظر رکھے ہوئے ہے۔
تنظیم نے بھارت میں مسلمان اقلیت اور مسلمانوں کے مقدس مقامات کا تحفظ یقینی بنانے کے اپنے مطالبے کا اعادہ کیا۔
او آئی سی نے اقوام متحدہ کے منشور اور متعلقہ بین الاقوامی معاہدوں میں شامل قوانین پر عمل درآمد کی اہمیت کا بھی اعادہ کیا جن میں کسی امتیاز کے بغیر اقلیتوں کے حقوق کی پاسداری کی ضمانت دی گئی ہے۔بیان میں کہا گیا ہے کہ ان اصولوں اور معاہدوں کے منافی کوئی بھی کارروائی مزید کشیدگی کا باعث بن سکتی ہے جس کے پورے خطے کی امن و سلامتی پر سنگین اثرات مرتب ہو سکتے ہیں.

Leave a Reply

Back to top button