تازہ تریندنیا سےفن اور فنکار

آریان خان کو 25 دن بعد ضمانت مل گئی

دوران سماعت آریان خان کے وکلا نے عدالت کو آگاہی دی تھی کہ ان کے موکل کو کروز میں داخل ہونے سے قبل ہی گیٹ پر گرفتار کیا گیا تھا جب کہ ان سے منشیات بھی برآمد نہیں ہوئی اور نہ ہی انہوں نے کبھی منشیات استعمال کرنے کا اعتراف کیا ہے۔

منشیات رکھنے اور اسے استعمال کرنے کے کیس میں گرفتار بولی وڈ اداکار شاہ رخ خان کے بیٹے آریان خان کو 25 دن بعد ضمانت مل گئی۔

آریان خان کو انسداد منشیات فورس نے تین اکتوبر کو کروز پارٹی کے دوران منشیات رکھنے اور استعمال کرنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا اور وہ تب سے جیل میں تھے۔

ممبئی ہائی کورٹ نے 28 اکتوبر کو آریان خان کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے ان کی ضمانت کی درخواست منظور کی۔

’ٹائمز آف انڈیا‘ کے مطابق آریان خان اور دیگر گرفتار ملزمان کے وکلا کے دلائل مکمل ہونے کے بعد 28 اکتوبر کو عدالت نے آریان خان کی ضمانت کی درخواست منظور کی۔

آریان خان نے ضمانت کے لیے ممبئی ہائی کورٹ میں 20 اکتوبر کو درخواست دائر کی تھی، جس پر پہلی بار 26 اکتوبر کو سماعت ہوئی تھی مگر پہلے دن وکلا کے دلائل مکمل نہ ہونے پر دوسرے روز 27 اکتوبر کو بھی سماعت کی گئی تھی۔

دوسرے روز بھی وکلا کے دلائل مکمل نہ ہونے پر تیسرے روز 28 اکتوبر کو سہ پہر تین بجے سماعت کا دوبارہ آغاز کیا گیا اور وکلا کے دلائل مکمل ہونے پر ہائی کورٹ کے سنگل بینچ نے آریان خان کی ضمانت درخواست منظور کی۔

آریان خان کی درخواست ضمانت کا کیس سابق بھارتی اٹارنی جنرل نے لڑا جب انہیں دیگر وکلا کی بھی معاونت رہی۔

دوران سماعت انسداد منشیات فورس کے وکلا نے آریان خان کی ضمانت کی زبردست مخالفت کی اور دعویٰ کیا کہ شاہ رخ خان کے بیٹے کو منشیات استعمال کرنے کے بے ہوشی کی حالت میں گرفتار کیا گیا تھا۔

دوران سماعت آریان خان کے وکلا نے عدالت کو آگاہی دی تھی کہ ان کے موکل کو کروز میں داخل ہونے سے قبل ہی گیٹ پر گرفتار کیا گیا تھا جب کہ ان سے منشیات بھی برآمد نہیں ہوئی اور نہ ہی انہوں نے کبھی منشیات استعمال کرنے کا اعتراف کیا ہے۔

دوران سماعت انسداد منشیات فورس کے وکلا نے عدالت کو بتایا تھا کہ آریان خان کے فون کی چیٹنگ سے معلوم ہوتا ہے کہ وہ منشیات استعمال کرنے کے عادی رہے ہیں۔

ممبئی ہائی کورٹ کی سنگل بینچ نے تمام وکلا کے دلائل سننے کے بعد 28 اکتوبر کی آریان خان کی ضمانت منظور کی۔

ہائی کورٹ کی جانب سے ضمانت درخواست منظور کیے جانے سے قبل ممبئی کی سیشن کورٹ نے 20 اکتوبر کو آریان خان کی ضمانت درخواست مسترد کردی تھی، جب کہ اس سے قبل میٹروپولیٹن کورٹ نے ان کی درخواست 7 اکتوبر کو مسترد کرتے ہوئے انہیں 14 دن کے عدالتی ریمانڈ پر جیل بھیج دیا تھا۔

آریان خان کا عدالتی ریمانڈ 21 اکتوبر کو مکمل ہوا تھا، جس کے بعد عدالت نے ان کے ریمانڈ میں 9 دن کی توسیع کرتے ہوئے انہیں 30 اکتوبر تک جیل میں رکھنے کا حکم دیا تھا۔

Leave a Reply

Back to top button