تازہ ترینخبریںصحت

آلودگی: آج لاہور پہلے، دہلی دوسرے نمبر پر

فضائی آلودگی کی وجہ سے دہلی میں تعلیمی اداروں کو ایک ہفتے کے لیے بند کر دیا گیا ہے، جبکہ بھارتی سپریم کورٹ نے بھی فضائی آلودگی کا نوٹس لیا ہوا ہے۔

صوبۂ پنجاب کے وسطی علاقے شدید فضائی آلودگی کی لپیٹ میں ہیں، وسطی پنجاب کے اکثر شہر دنیا کے فضائی آلودہ ترین شہروں میں شامل ہیں۔

آج صبح بھی دنیا کے بڑے شہروں کی فہرست میں لاہور دنیا بھر میں فضائی آلودگی کے لحاظ سے سب زیادہ آلودہ شہر قرار پایا ہے، ایئر کوالٹی انڈیکس کے مطابق آج صبح لاہور میں پرٹیکیولیٹ میٹرز کی تعداد 433 ریکارڈ کی گئی ہے۔

دنیا کے بڑے شہروں میں فضائی آلودگی کے لحاظ سے بھارت کا دارالحکومت دہلی دوسرے نمبر پر ہے جہاں پرٹیکیولیٹ میٹرز کی تعداد 366 ہے، جبکہ چین کا شہر ووہان 198 پرٹیکیولیٹ میٹرز کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہے۔

دہلی میں فضائی آلودگی بڑھنے سے بچوں میں سانس کی بیماریوں میں اضافہ ہو گیا ہے۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کےمطابق دہلی کے بچوں میں دمے سمیت سانس کی دائمی بیماریاں بڑھ گئی ہیں۔

مقامی ڈاکٹرز کے مطابق بھارتی دارالحکومت میں 10 دنوں میں سانس کی بیماریوں میں مبتلا بچوں کی تعداد میں 3 گنا اضافہ ہوا ہے۔

فضائی آلودگی کی وجہ سے دہلی میں تعلیمی اداروں کو ایک ہفتے کے لیے بند کر دیا گیا ہے، جبکہ بھارتی سپریم کورٹ نے بھی فضائی آلودگی کا نوٹس لیا ہوا ہے۔

ادھر ایئر کوالٹی انڈیکس کے مطابق پاکستان میں ساہیوال پہلے نمبر پر ہے جہاں پرٹیکیولیٹ میٹرز کی تعداد 459 ہے اور لاہور433 پرٹیکیولیٹ میٹرز کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے۔

گوجرانوالہ میں 369، بہاولپور میں 354 اور رائے ونڈ میں پرٹیکیولیٹ میٹرز کی تعداد 331 ریکارڈ کی گئی ہے۔

ایئر کوالٹی انڈیکس کی درجہ بندی کے مطابق 151 سے 200 درجے تک آلودگی مضرِ صحت ہے۔

ایئر کوالٹی انڈیکس کے مطابق 201 سے 300 درجے تک آلودگی انتہائی مضرِ صحت ہے، جبکہ 301 سے زائد درجہ خطرناک آلودگی کو ظاہر کرتا ہے۔

Leave a Reply

Back to top button