تازہ ترینخبریںپاکستان سے

بلوچستان: دو دھماکوں میں 3 سیکیورٹی اہلکار شہید، 4 زخمی

تاہم سیکیورٹی فورسز اور دہشت گردوں کے مقابلے کے دوران خاران سے تعلق رکھنے والے جاسوس نصیب اللہ اور لکی مروت کے رہائشی جاسوس نے اپنی جانوں کی قربانی دیتے ہوئے جام شہادت نوش کیا۔

بلوچستان کے علاقے سبی میں ایک حملے میں 2 سیکیورٹی اہلکار شہید ہوگئے جبکہ مکران میں بارودی سرنگ میں دھماکے سے ایک سیکیورٹی اہلکار نے جام شہادت نوش کیا۔

انٹر سروسز پبلک ریلیشن (آئی ایس پی آر) کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا کہ مکران کے علاقے ٹمپ میں بیرونی حمایت یافتہ دہشت گردوں کے گروپ نے سیکیورٹی فورسز کی چیک پوسٹ پر فائرنگ کردی۔

انہوں نے کہا کہ سیکیورٹی فورسز نے تمام تر دستیاب ہتھیاروں سے جوابی کارروائی کی جس کے نتیجے میں دہشت گردوں کو بھاری نقصان کا سامنا کرنا پڑا۔

تاہم سیکیورٹی فورسز اور دہشت گردوں کے مقابلے کے دوران خاران سے تعلق رکھنے والے جاسوس نصیب اللہ اور لکی مروت کے رہائشی جاسوس نے اپنی جانوں کی قربانی دیتے ہوئے جام شہادت نوش کیا۔

آئی ایس پی آر کا کہنا تھا کہ سیکیورٹی فورسز بزدل دہشت گردوں کی کارروائیوں کو شکست دینے کےلیے پُر عزم ہیں، ان دہشت گردوں کا مقصد بلوچستان میں امن و استحکام اور صوبے کی ترقی کو نقصان پہنچانا ہے۔

دریں اثنا، ضلع سبی میں بارودی سرنگ میں دھماکے سے ایک سیکیورٹی اہلکار شہید ہوا اور ایف سی کے 2 اہلکاروں سمیت 4 اہلکار زخمی ہوئے۔

حکام کے مطابق سبی کے علاقے بابر کچ میں فرنٹیئر کور کے تین اہلکار گشت کر رہے تھے ان میں سے ایک اہلکار نے شر پسندوں سے کی جانب جھاڑیوں میں بنائی گئی بارودی سرنگ پر پیر رکھا اور دھماکے کے نتیجے میں جائےوقوعہ پر ہی جان کی بازی ہار گیا جبکہ واقعے میں 2 اہلکار زخمی ہوئے۔

بعد ازاں سیکیورٹی فورسز نے جائے وقوعہ کو گھیرے میں لیتے ہوئے شہید و زخمی اہلکاروں کو کمبائن ملیٹری ہسپتال منتقل کردیا گیا۔

حکام کا مزید کہنا تھا کہ سبی ٹاؤن میں ہونے والے دھماکے میں 2 مزدور بھی زخمی ہوئے، مزدور تعمیراتی کام کر رہے تھے، ان میں سے ایک مزدور سمینٹ کے تھیلے منتقل کرنے گیا ان تھیلوں میں دھماکہ خیز مواد موجود تھا جو زور دار آواز میں پھٹا اور واقعے میں 2 مزدور زخمی ہوئے۔

زخمی مزدوروں کی شناخت محمد افضل اور ماجد خان نام سے ہوئی دونوں مزدوروں کا تعلق پنجاب سے ہے۔

Leave a Reply

Back to top button