سپورٹس

دورہ نیوزی لینڈ: بلے بازوں کی کارکردگی فتح کی کنجی قرار

قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے نیوزی لینڈ کے خلاف سیریز کیلئے بلے بازوں کو کامیابی کی کنجی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ دورے میں فتح کیلئے بلے بازوں کو نیوزی لینڈ کی کنڈیشنز سے خود کو جلد ہم آہنگ کر کے کارکردگی دکھانی ہو گی۔

بدھ کو گفتگو کرتے ہوئے قومی ٹیم کے کوچ نے کہا کہ ٹیم اچھی شکل میں ہے، ہم نے تین دن ٹریننگ کی جہاں ہر باؤلر نے روزانہ 15، 15 اوورز کیے جو نیک شگون ہے کیونکہ اس طرح کے موسم اور کنڈیشنز میں انہیں 10اوورز باؤلنگ کرنے کا عادی ہونا چاہیے۔

تاہم ان کا کہنا تھا کہ دورے میں باؤلرز سے زیادہ بلے بازوں کو نیوزی لینڈ کی کنڈیشنز سے خود کو جلد از جلد ہم آہنگ کرنا ہو گا اور ان کی کارکردگی فتح کی کنجی ثابت ہو سکتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ اگر پاکستان کو سیریز میں کامیابی حاصل کرنی ہے تو بلے بازوں کو سرد موسم اور مقامی کنڈیشنز سے خود کو ہم آہنگ کرنا ہو گا۔ انہیں ہم دفاع پر بھی کام کرنا ہو گا کیونکہ اگر آپ اس طرح کی کنڈیشنز میں کھیلنے کے عادی نہ ہوں تو ایشیا سے باہر آپ کے دفاع کا بہت کٹھن امتحان ہوتا ہے لیکن مجھے امید ہے کہ ہمارے بلے باز اس امتحان میں پورا اتریں گے۔

انہوں نے کھلاڑیوں کی فٹنس کو بہترین قرار دیتے ہوئے ایک مضبوط اور متوازن اسکواڈ تشکیل دینے پر سلیکٹرز کو بھی سراہا۔

مکی آرتھر کا کہنا تھا کہ ہماری ٹیم متوازن ہے اور جن کھلاڑیوں کا انتخاب کیا گیا ہے انہیں معلوم ہے کہ ٹیم میں کیا کردار ادا کرنا ہے اور اس سلسلے میں پریکٹس میچ انتہائی اہمیت کا حامل ہے جو سیریز کی تیاریوں کیلئے اچھی ریہرسل ثابت ہو گا۔

پاکستانی ٹیم دورہ نیوزی لینڈ کا آغاز کل سے پریکٹس میچ سے کرے گی جس کے بعد دونوں ٹیموں کے درمیان پانچ ون ڈے میچوں کی سیریز کا پہلا میچ چھ جنوری کو کھیلا جائے گا۔

کوچ نے نیوزی لینڈ کی ٹیم کی ہوم گراؤنڈ پر قابلیت کو سراہتے ہوئے کھلاڑیوں خبردار کیا کہ میزبان ملک میں جیتنا مشکل ہو گا کیونکہ نیوزی لینڈ آ کر زیادہ ٹیم جیت نہیں پاتیں۔

انہوں نے کہا کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم ہوم کنڈیشنز میں بہت اچھی ہے اور نتائج اس بات کی گواہی دیتے ہیں۔ ہر ٹیم ہی ہوم گراؤنڈ پر اچھی کارکردگی دکھاتی ہے لیکن بہترین ٹیم وہی ہوتی ہے جو ملک سے باہر سیریز جیت سکے لہٰذا یہ سیریز ہمارے لیے بہت اہمیت کی حامل ہے اور مجھے پوری امید ہے کہ اگر ہم اپنی بھرپور صلاحیتوں کے مطابق کھیلے تو ہم ان کا مقابلہ کر سکیں گے۔

Leave a Reply

Back to top button