Welcome to HTV Pakistan . Please select the content and listen it   Click to listen highlighted text! Welcome to HTV Pakistan . Please select the content and listen it
تازہ ترینخبریںصحت

سردیوں میں بالوں کی خشکی کے مسئلے کا حل

اولئیک ایسڈ انسان کے مدافعتی عمل کو بھی کم کر دیتا ہے، جس کے نتیجے میں سر کی سطح پر بھوسی جیسے سفید چھلکے پیدا ہوجاتے ہیں۔ یہ چھلکے سر کی سطح پر جمع ہوتے ہوتے، ذرات کی شکل میں شانوں پر گرنے لگتے ہیں۔

بالوں میں خشکی یا ڈینڈرف ایک ایسا مسئلہ ہے جس کی وجہ سے اکثر لوگ پریشانی کا سامنا کرتے ہیں، یہ خشکی قدرتی طور پر انسان کی جلد پر ہوتی ہے۔

تاہم، آپ یہ بات جان کر حیران ہوں گے کہ خشکی بنیادی طور پر فنگس کی وجہ سے ہوتی ہےاور یہ مسئلہ کئی بار اتنا بڑھ جاتا ہے کہ اس سے باہر نکلنا مشکل ہو جاتا ہے۔

ڈینڈرف انسان کے لیے سماجی سطح پر شرمندگی کا سبب بھی بن جاتی ہے۔

بالوں میں خشکی سے نمٹنے کےکچھ مؤثر طریقے

بالوں میں خشکی جس فنگس کی وجہ سے ہوتی ہے، اسے مالاسیزیا گلوبوسا کہتے ہیں۔

یہ فنگس سر کی جلد اور بالوں کا تیل جذب کر لیتی ہےاور اس دوران اولئیک ایسڈ بھی پیدا کرتا ہے جس کی وجہ سےجلد پر خارش ہو سکتی ہے۔

اولئیک ایسڈ انسان کے مدافعتی عمل کو بھی کم کر دیتا ہے، جس کے نتیجے میں سر کی سطح پر بھوسی جیسے سفید چھلکے پیدا ہوجاتے ہیں۔ یہ چھلکے سر کی سطح پر جمع ہوتے ہوتے، ذرات کی شکل میں شانوں پر گرنے لگتے ہیں۔

اس صورتحال پر قابو پانے کے لیے سورج سے نکلنے والی شعائیں(UV Rays) مددگار ثابت ہو سکتی ہیں۔

ایسے میں اکثر لوگ سمجھتے ہیں کہ سر پر تیل لگانا چاہیئے جبکہ ایس کرنا بالکل بھی اچھا نہیں تاہم، کچھ کیمیکلز ہیں جوکہ خشکی کو ختم کرسکتے ہیں۔

ان کیمیکلز میں سب سے زیادہ مؤثر اینٹی فنگل کیمیکلز، مائیکونازول اور کیٹوکونازول ہیں۔

کیٹوکونازول کیمیکل کو شیمپو میں استعمال ہوتا ہے جبکہ مائیکونازول فی الحال صرف کریم کی صورت میں دستیاب ہے۔

خشکی سے بچاؤ کے لیے مؤثر اینٹی ڈینڈرف شیمپو

بالوں کی خشکی سے بچاؤ یا اس پر قابو پانے کے لیے ایسے مندرجہ ذیل کیمیکلز پر مشتمل شیمپو استعمال کیے جاسکتے ہیں؛

1-کیٹوکونازول
2-سیلیسیلک ایسڈ
3-سیلینیم سلفائیڈ
4-زنک پائیریتھیون
5-کول ٹار

Leave a Reply

Back to top button
Click to listen highlighted text!