خبریںدنیا سے

سرد ترین کینیڈا میں قیامت خیز گرمی, 126 سالہ ریکارڈ ٹوٹ گیا، سیکڑوں ہلاکتیں

سرد ترین کینیڈا میں قیامت خیز گرمی سے نظام زندگی مفلوج ہو کر رہ گیا اور غیر معمولی گرمی کے باعث اب تک سیکڑوں افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق اچانک اور غیرمعمولی گرمی سے کینیڈا کے صوبے برٹش کولمبیا میں جمعہ سے اب تک مرنے والوں کی تعداد 233 ہو گئی جبکہ حکام نے اموات میں اضافے کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔

تاریخ میں پہلی بار کینیڈا کے سرد ترین علاقے میں درجہ حرارت 49.5 ڈگری سینٹی تک پہنچ گیا ہے۔

رپورٹس کے مطابق صرف برٹش کولمبیا کے شہر وینکوور میں 69 اموات اچانک رپورٹ ہوئیں، حبس اور گھٹن سے دم توڑ جانے والے افراد میں زیادہ تر بوڑھے اور بیمار شامل ہیں۔

سرد ترین علاقوں میں گرمی سے ائیرکنڈیشنڈز کی مانگ بڑھ گئی ہے، شدید گرمی سے نظام زندگی متاثر ہو گئی ہے اور گرمی کا 126 سالہ رکارڈ ٹوٹ گیا ہے۔

ماہرین موسمیات کے مطابق درجہ حرارت جمعے سے بڑھنا شروع ہوا، مزید کئی روز تک شدید گرمی کی لہر جاری رہنے کی پیش گوئی بھی کی گئی ہے۔

خیال رہے کہ برٹش کولمیبا کے شہر اگیسز میں 1895 میں 28 جون کو سب سے زیادہ 31.3 سیلیس ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا تھا۔

Leave a Reply

Back to top button