HTV Pakistan
بنیادی صفحہ » انٹرویوز » فلم کی آفر ہوئی مگر انکار کر دیا: فزائلہ لاشاری

فلم کی آفر ہوئی مگر انکار کر دیا: فزائلہ لاشاری

پڑھنے کا وقت: 4 منٹ

ٹی وی کی نامور فنکارہ کی ثاقب اسلم دہلوی سے گپ شپ
فزائلہ لاشاری کا شمار ہماری نامور آرٹسٹس میں ہوتا ہے۔ اس کی وجہ ان کی خوبصورتی اور منفر اداکاری ہے۔ گزشتہ دنوں ہماری ان سے ایک نجی پروڈکشن ہاؤس کے سیٹ پر ملاقات ہوئی۔ اس ملاقات میں ان سے ہونے والی بات چیت ہم اپنے قارئین کے لئے پیش کر رہے ہیں۔

سوال : فزائلہ سب سے پہلے آپ ہمیں یہ بتائیں کہ جب آپ نے شوبز میں رکھا تو آپ کی عمر کتنی تھی؟
فزائلہ لاشاری: میں نے 13 سال کی عمر میں پاکستان ٹیلی ویژن سے اپنے کرئیر کا آغاز کیا تھا۔ سب سے پہلے میں نے خالد انعم اور نائلہ جعفری کی بیٹی کا کردار ادا کیا جسے بہت زیادہ سراہا گیا۔
سوال: کیا آپ کے گھر سے بھی کوئی اس فیلڈ میں تھا جو آپ کو اتنی کم عمری میں ایک اچھی کاسٹ کے ساتھ کام کرنے موقع مل گیا؟
فزائلہ لاشاری: جی نہیں، ایسی بات نہیں تھی۔

یہ بھی پڑھیں! فلم میں کام کا فیصلہ سوچ سمجھ کر کروں گی: سحر خان

سوال: تو پھر آپ کو کام کیسے ملا؟
فزائلہ لاشاری: دراصل میرے سکول میں ایک ڈرامہ تھا جس کے مہمانِ خصوصی ایک ہدایت کار تھے۔ انہوں نے جب میرا سین دیکھا تو مجھ سے کہا کہ تم نے بہت اچھی پرفارمنس دی ہے۔ میں پاکستان ٹیلی ویژن کے لئے ایک ڈرامہ بنا رہا ہوں جس کی کاسٹ میں خالد انعم اور نائلہ جعفری ہیں۔ اس ڈرامے میں ان کے تین بچے ہوں گے جب کہ تمہارا کردار بڑی بہن کا ہو گا۔ میں تو اس وقت چھوٹی تھی، اتنا ٹی وی بھی نہیں دیکھتی تھی اور نہ ہی فنکاروں کو جانتی تھی مگر میری والدہ نے مجھ سے کہا کہ تم کام کرو، اس سے تمہیں تجربہ حاصل ہو گا۔ ان کی بات ماتنے ہوئے میں نے اس ڈرامے میں کام کیا اور اللہ تعالیٰ نے مجھے کامیابی سے نوازا۔
سوال: پھر اس کے بعد آپ شوبز کی دنیا میں باقاعدہ کب آئیں؟
فزائلہ لاشاری: اس ڈارمے کے بعد میں نے ایک سال کا وقفہ لیا کیونکہ اداکاری سے میری تعلیم پر منفی اثر پڑھ رہا اور او لیول کرنے کے بعد میں نے پھر اس فیلڈ کو جوائن کر لیا۔

سوال: ’’نواب زادیاں‘‘ میں آپ کا کیا کریکٹر ہے؟
فزائلہ لاشاری: ’’نواب زادیاں‘‘ میں مَیں جو کردار ادا کر رہی ہوں وہ بہت منفرد ہے۔ اس میں میرا کردار ایک ایسی لڑکی کا ہے جو بہت سادہ طبیعت کی مالک، سمجھدار اور گھر والوں سے بہت پیار کرنے والی ہے جس کی دو بہنیں ہیں۔ اُن میں سے ایک چالاک اور دوسری بھولی بھالی ہے۔
سوال: اس کے علاوہ کیا آپ کا کوئی منصوبہ پائپ لائن میں ہے؟
فزائلہ لاشاری: آج کل میں ایک نیا اسکرپٹ پڑھ رہی ہوں۔انشااللہ بہت جلد اس کی پروڈکشن شروع ہو جائے گی۔

یہ بھی پڑھیں! فلم انڈسٹری کی ترقی نظر آنے لگی ہے: افشاں قریشی

سوال: آپ کا لاسٹ پروجیکٹ کون سا تھا؟
فزائلہ لاشاری: اس سے پہلے میرا ڈرامہ ’’حیا کا رنگ کون سا‘‘ تھا۔
سوال: آپ ہر پروجیکٹ کے بعد بریک کیوں لیتی ہیں؟
فزائلہ لاشاری: ہاں! میں اپنے ایک یا دو پروجیکٹ کے بعد بریک ضرور لیتی ہوں۔ میں اپنے لاسٹ ڈرامے سے پہلے بھی ڈیڑھ سال امریکہ میں رہ کر آئی تھی۔ یہ بریک اس لئے ہوتی ہے کہ آپ تازہ دم ہو جائیں اور اپنا کام پہلے سے زیادہ بہتر انداز میں کر سکیں۔ اس کے علاوہ مجھے سفر کرنے کا بہت شوق ہے، اس شوق کی تکمیل کے لئے میں ایک یا دو پروجیکٹس کے بعد بریک ضرور لیتی ہوں۔

سوال: شوبز میں آنے کے حوالے سے آپ کو زیادہ سپورٹ کس نے کیا؟
فزائلہ لاشاری: گھر والوں نے مجھے بے حد سپورٹ کیا۔ سب سے زیادہ میری ماں نے مجھے سہارا دیا۔ مجھے ایسا لگتا ہے کہ وہ بھی ایک فنکارہ بننا چاہتی تھیں اور اگر انہیں موقع ملتا تو آج ان کا کوئی ثانی نہ ہوتا۔
سوال: پاکستان میں بننے والی فلموں کے بارے میں آپ کیا کہیں گی؟
فزائلہ لاشاری: ہمارے ہاں اب اچھی فلمیں بن رہی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں! ہمارا ڈرامہ حقیقت پرمبنی ہے: اداکارہ کرن تعبیر

سوال: کیا آپ فلم میں کام کرنا چاہتی ہیں؟
فزائلہ لاشاری: جی، جب میں امریکہ جا رہی تھی تو مجھے فلم کی آفر ہوئی مگر میں نے انکار کر دیا تھا کیونکہ میں سفر کی بہت شوقین ہوں، گھومنا پھرنا مجھے بہت اچھا لگتا ہے۔
سوال: ایک پلے میں آپ منفی اور مثبت دونوں ہی قسم کا کریکٹر کر چکی ہیں، یہ تجربہ کیسا رہا؟
فزائلہ لاشاری : ایسا کام چیلنج سے بھر پور ہوتا ہے جس میں آپ کا آدھا رول پوزیٹو ہو اور آدھا ڈرامہ منفی کردار پر مبنی ہو۔ مجھے یہ مشکل لگا تھا لیکن میں نے احسن طریقے سے نبھایا اس کو، اس پر محنت کی کیونکہ جس کردار پر آپ کو زیادہ محنت کرنی پڑھے، اس میں آپ کی صلاحیتیں زیادہ نکھر کر سامنے آتی ہیں۔

سوال: آپ کے خیال میں آپ کی کامیابی کی وجہ کیا ہے؟
فزائلہ لاشاری: جی، ایمانداری، اللہ تعالیٰ پر یقین، اپنے کام کے ساتھ ناانصافی نہ کرنا، چھوٹے بڑوں کا احترام کرنا، مسلسل سیکھنے کی جستجو میں رہنا ہی میری کامیابی کی وجہ ہے۔ یہ اصول صرف میرے لئے ہی نہیں بلکہ جو بھی ان پر عمل کرتا ہے اللہ تعالیٰ اسے ضرور کامیابی سے نوازتا ہے۔

جواب دیجئے