تازہ تریندیسی ٹوٹکےصحت

لیمن گراس آئل: بے چینی وپریشانی ختم کرنے میں لاجواب

انٹی فنگل، انٹی وائرل،انٹی آکسیڈنٹ اور اینٹی بیکٹیریل ہونے کی بدولت خوشبووالا صابن بنانے اور میک اپ کے سامان میں بھی استعمال کیا جاتا ہے۔اس کے علاوہ مچھر بھگانے والی ادویات، اور سینتھیٹک خوشبوؤں میں بھی یہ استعمال کیا جاتا ہے۔

لیمن گراس کا نبا تاتی نام Cymbopogon ہے۔ عربی میں ازخر، انگریزی میں لیمن گراس اور اردو میں جنگلی گھاس کہلانے والی یہ نعمت صحرا میں پیدا ہوتی ہے۔ اسے براعظم ایشیاء،افریقہ اور آسٹریلیا کے قرب وجوار میں کاشت کیا جاتا ہے۔ لیمن گراس مشرقی ہندوستان، مالابار اور کوچن میں بھی ملتی ہے۔ آجکل پاکستان میں بھی صحرائی علاقہ جات میں اسے اُگایا جا رہا ہے۔ یہ ادویات کے غذائی استعمال کیلئے موزوں ہے۔ لیمن گراس کے پودے کی لمبائی تین فٹ تک بڑھتی ہے جبکہ اس کے پتوں کے تیل کا رنگ بھورامائل زرد اور سرخی مائل بھورا ہو سکتا ہے۔

لیمن گراس آئل کے فوائد
انٹی فنگل، انٹی وائرل،انٹی آکسیڈنٹ اور اینٹی بیکٹیریل ہونے کی بدولت خوشبووالا صابن بنانے اور میک اپ کے سامان میں بھی استعمال کیا جاتا ہے۔اس کے علاوہ مچھر بھگانے والی ادویات، اور سینتھیٹک خوشبوؤں میں بھی یہ استعمال کیا جاتا ہے۔ اس کے کئی فوائد میں سے چند ایک مندرجہ ذیل ہیں۔

جلد کو صاف، بالوں کی نشوونما کرے
لیمن گراس آئل خون کی گردش کو صحیح رکھتا، کیل مہاسوں اور چکنائی والی جلد کو صاف کرتا ہے۔ یہ کھوپڑی میں چکنائی کی مقدار کو متوازن رکھ کر بالوں کی نشوونما کو بھی تیز کرتا ہے۔

بلیک ہیڈز کا خاتمہ کرے
اگر وائٹ اور بلیک ہیڈز صاف نہ ہوتے ہوں تو چند قطرے لیمن گراس کے تیل میں اتنی ہی مقدار میں عرق گلاب ملایئے اور کاٹن بال کی مدد سے متاثرہ جلد کو تین سے چار مرتبہ صاف کریں، یہ شکایت جاتی رہے گی۔

پٹھوں کو مضبوط بنایئے
بھاری وزن اٹھانے سے یاغلط سمت پر وزن اٹھا لینے سے عضلات میں کھنچاؤ اور درد کی کیفیت بڑھ جاتی ہے۔عام طور پر فزیو تھرا پسٹ بھی چند ایسی مشقیں کراتے ہیں جن میں پہلے تیل لگا کر دائرے میں گھمانے سے عضلات نرم پڑتے ہیں، لیمن گراس آئل کے مساج سے تھکن زائل ہوتی ہے، ٹشوز فعال رہتے ہیں اور درد ختم ہو جاتی ہے۔

1 2 3اگلا صفحہ

Leave a Reply

Back to top button