تازہ ترینخبریںفن اور فنکار

متھیرا کا ’لیپو سکشن‘ سرجری کرانے کا اعتراف

متھیرا پر کافی عرصے پلاسٹک سرجری کروانے کے الزامات عائد کیے جاتے رہے ہیں اور ان سے متعلق سوشل میڈیا پر افواہیں پھیلتی رہی ہیں کہ انہوں نے ہونٹوں سمیت جسم کے دیگر اعضا کی سرجری کروا رکھی ہے۔

ماڈل، اداکارہ و ٹی وی میزبان متھیرا نے اعتراف کیا ہے کہ انہوں نے ’لیپو سکشن‘ سرجرائی کروائی تھی۔

متھیرا پر کافی عرصے پلاسٹک سرجری کروانے کے الزامات عائد کیے جاتے رہے ہیں اور ان سے متعلق سوشل میڈیا پر افواہیں پھیلتی رہی ہیں کہ انہوں نے ہونٹوں سمیت جسم کے دیگر اعضا کی سرجری کروا رکھی ہے۔

اگرچہ وہ ماضی میں بھی پلاسٹک سرجری جیسے الزامات کو مسترد کر چکی ہیں، تاہم حال ہی میں انہوں نے احسن خان کے شو ’ٹائم آؤٹ ود احسن‘ میں ایک بار پھر ان خبروں کو غلط قرار دیا کہ انہوں نے کوئی پلاسٹک سرجری کروائی ہے۔

متھیرا شو میں اپنی بہن روز کے ساتھ شریک ہوئیں، جہاں دونوں بہنوں نے شوبز کیریئر سمیت خود پر ہونے والی تنقید پر بھی کھل کر باتیں کیں۔

متھیرا نے بتایا کہ وہ 2005 میں افریقی ملک زمبابوے سے پاکستان آئی تھیں اور اس وقت وہ انتہائی کم عمر تھیں جب کہ اگلے سال وہ 30 برس کی ہوجائیں گی۔

پروگرام کے دوران متھیرا کی بہن روز نے بتایا کہ انہیں اداکاری یا میڈیا انڈسٹری کا حصہ بننے کا کوئی شوق نہیں تھا مگر بہن کے شوبز میں آنے کے بعد اب وہ بھی اس کا حصہ بن چکی ہیں۔

روز کے مطابق انہوں نے نجی ٹی وی ایکسپریس انٹرٹینمنٹ کے ڈرامے سے ڈیبیو کیا ہے اور جلد ہی ان کی فلم ریلیز ہونے والی ہے،جس کے بعد ان کی ویب سیریز بھی ریلیز ہوگی۔

روز نے بھی بتایا کہ ان کا وزن بھی 100 کلو سے زیادہ تھا، جسے انہوں نے کم کرکے اپنا وزن 58 کلو گرام تک کیا ہے۔

انہوں نے اس تاثر کو مسترد کیا کہ انہوں نے اداکاری کے دباؤ کی وجہ سے وزن کم کیا۔

پروگرام کے دوران متھیرا نے بتایا کہ انہوں نے کبھی بھی کسی طرح کی کوئی پلاسٹک سرجری نہیں کروائی، ان کا وزن ایک روڈ حادثے کے بعد بڑھنا شروع ہوا تھا۔

روز نے بھی گواہی دی کہ ان کی بہن متھیرا نے کوئی پلاسٹک سرجری نہیں کروائی، البتہ انہوں نے ’لیپو سکشن‘ کروایا ہے۔

متھیرا نے واضح کیا کہ ’لیپو سکشن‘ جسم کے مختلف حصوں سے چربی کو نکلوانے کو کہتے ہیں۔

ایک سوال کے جواب میں متھیرا نے اعتراف کیا کہ جب وہ زمبابوے سے پاکستان منتقل ہوئی تھیں تو انہیں یہاں کے سماج سے متعلق زیادہ معلومات نہیں تھی، جس کے باعث شروع میں وہ مختصر لباس بھی پہنتی رہیں۔

متھیرا نے بتایا کہ ان کے زمبابوے نژاد والد انتقال کر چکے ہیں، اب ان کا جینا مرنا پاکستان میں ہی ہے، کیوں کہ ان کی والدہ یہیں کی ہیں۔

پروگرام کے ایک سیگمنٹ میں متھیرا نے شہروز سبزواری کو مشورہ دیا کہ وہ کم بولا کریں، ساتھ ہی ان کی اداکاری کی تعریفیں بھی کیں۔

اسی سیگمنٹ میں انہوں نے مہوش حیات کو ان کے آئٹم سانگ کے بول ’بلی‘ سے تشبیہ دیتے ہوئے ان کی اداکاری اور شخصیت کی بھی تعریف کی۔

متھیرا نے عامر لیاقت حسین کو ’میمز‘ تخلیق کا سبب قرار دیا جب کہ وقار ذکا کو ’کرپٹو کرنسی‘ ماہر قرار دیتے ہوئے ان کی شخصیت کی تعریف بھی کی۔

اداکارہ نے انکشاف کیا کہ وہ وقار ذکا کو 10 سال سے بطور بھائی جانتی ہیں اور وہ اچھی شخصیت کے مالک ہیں۔

Leave a Reply

Back to top button