تازہ تریندیسی ٹوٹکےصحت

ٹی ٹری آئل: بالوں کی صحت کا ضامن اور جلد کا معالج

1732ء کے لگ بھگ ایک برطانوی مہم جو کیپٹن جیمز کک نے ایک پودہ دریافت کیا جو ٹی ٹری کہلاتا ہے۔ اسے آسٹریلیا میں تو کم وبیش ایک سو سال سے مختلف مقاصد کیلئے استعمال کیا جا رہا ہے لیکن گزشتہ چند سالوں سے اس کو بہت زیادہ مقبولیت حاصل ہوئی ہے۔

1732ء کے لگ بھگ ایک برطانوی مہم جو کیپٹن جیمز کک نے ایک پودہ دریافت کیا جو ٹی ٹری کہلاتا ہے۔ اسے آسٹریلیا میں تو کم وبیش ایک سو سال سے مختلف مقاصد کیلئے استعمال کیا جا رہا ہے لیکن گزشتہ چند سالوں سے اس کو بہت زیادہ مقبولیت حاصل ہوئی ہے۔

ٹی ٹری آئل کے فوائد
ٹی ٹری کا تیل شفاف اور ہلکے زرد رنگ کا محلول ہوتا ہے جس کی خوشبو تیز ہوتی ہے۔ صحت کے حوالے سے اس کے بے شمار فوائد ہیں جن سے چند ایک یہاں بیان کئے جا رہے ہیں۔

بالوں میں چمک لائے
کچھ لوگوں کے بال گھنے اور لمبے تو ہوتے ہیں لیکن جاندار اور پُرکشش نہیں ہوتے ایسے بالوں میں چمک لانے کے لئے ٹی ٹری نریشمنٹ ماسک بہت مفید ثابت ہوتا ہے۔ اس مقصد کیلئے دو چمچ زیتون کے تیل میں دو، دو چمچ دودھ،کیسٹر آئل، ایک انڈہ اور دس قطرے ٹی ٹری آئل ملا لیں۔اس ماسک کو سر کی جلد پر لگا کر پلاسٹک کی تھیلی سے ڈھانپ لیں اور دو سے تین گھنٹے لگا رہنے دیں۔ اب ہئیر ڈرائیر سے پانچ منٹ تک گرم ہوا سر کی سطح پر پہنچائیں اور سر دھو لیں۔ اس ماسک کا استعمال ہفتہ میں دو دفعہ کرنے سے آپ کے بال چمکدار اور ملائم ہو جائیں گے۔

جلد کا محافظ
ٹی ٹری آئل جراثیم کش خصوصیات کا حامل ہے، جلد کی fungusکو روکنے کی صلاحیت رکھتا، اسے نقصان پہنچانے والے جراثیم سے بچاتا اور خراب جلد کو ٹھیک کرتا ہے۔ یہ دافع سوزش بھی ہے۔ امریکن ایسوسی ایشن آف ڈرماٹالوجی کے مطابق جراثیم کش خصوصیات کے باعث ٹی ٹری آئل ان عوامل کو ختم کرتا ہے جو جلد پر دانوں کا سبب بنتے ہیں۔ یہ تیل جلد کے مساموں کو بند نہیں کرتا۔ چکنی جلد، ایکنی اور زیادہ کھلے مساموں جیسے مسائل کی صورت میں آپ ایک کپ پانی میں تین سے چارقطرے ٹی ٹری آئل شامل کر کے صاف سپرے بوتل میں بھر لیں اور دن میں دو مرتبہ کھلے مساموں پر اسپرے کریں۔ اسے صاف روئی کی مدد سے بھی کھلے مساموں پرلگایا جا سکتا ہے۔

پاؤں کی حفاظت کرے
ٹی ٹری آئل ایگزیما…… پھپھوندی کی وجہ سے پیدا ہونے والی بیماری جس میں پاؤں کی جلد پرسوزش اور کھردرا پن آجاتا ہے…… میں مفید رہتا ہے۔ ناخن کے انفیکشن اور پسینے کے باعث پاؤں کی بدبو کو بھی روکتا ہے۔

1 2 3اگلا صفحہ

Leave a Reply

Back to top button