خبریںپاکستان سے

پاکستان سمیت دنیا بھر کیلئے بڑا مسئلہ بھارت سے پھیلنے والا کورونا وائرس ہے: وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ اس وقت ہمارے پاس ویکسین موجود ہے، عوام اس کا فائدہ اٹھائیں۔ کورونا وائرس اپنی ہیت مسلسل تبدیل کرتا رہا ہے۔ پاکستان سمیت دنیا بھر کے لیے بڑا مسئلہ بھارت سے پھیلنے والا کورونا وائرس ہے۔ اگر ہم چوتھی لہر سے نکل گئے تو ملک کو تباہی سے بچا لیں گے۔

وزیراعظم نے کہا کہ مکمل ویکسین لگانے تک لہریں آتی رہیں گی، شہری ویکسین لازمی لگوائیں۔ اگر ہم چوتھی لہر سے نکل گئے تو ملک کو تباہی سے بچا لیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ عالمی جریدے دی اکانومسٹ نے پاکستان کو کورونا سے مقابلہ کرنے والے تین بہترین ملکوں میں شامل کیا ہے، پاکستانی عوام نے ثابت کیا کہ وہ اپنی حکومت کے ساتھ کھڑے ہیں۔

وزیراعظم عمران خان نے ملک میں عالمی وبا کورونا وائرس کے کیسز بڑھنے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ عوام کو احتیاط کا دامن ہاتھ سے نہیں چھوڑنا چاہیے۔

عوام کو کورونا کی صورتحال سے آگاہ کرتے ہوئے وزیراعظم کا کہنا تھا کہ انڈین قسم کا وائرس اس وقت بنگلا دیش اور افغانستان تک پہنچ چکا ہے، ہمیں بہت احتیاط کرنا ہوگی۔ انڈونیشیا کے حالات بہت خراب ہیں۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ اللہ تعالیٰ کا پاکستان پر ابھی تک خاص کرم ہے۔ کورونا کے تدارک کیلئے نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) نے بڑے اچھے فیصلے کیے۔

ان کا کہنا تھا کہ میں کورونا ایس او پیز پر عمل کرنے کی دوبارہ اپیل کرتا ہوں۔ کورونا کی چوتھی لہر سے بہت خوف ہے۔ شہری ماسک لازمی پہنیں، احتیاط کرکے ہم ہم اپنی معیشت کو بچا سکتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ لاک ڈاؤن کا سب سے زیادہ نقصان غریب طبقے کا ہوتا ہے۔ کورونا کیسز بڑھیں گے تو لوگوں کا روزگار متاثر ہوگا۔ لاک ڈاؤن سے بچنے کے لیے ابھی سے احتیاط کریں۔

وزیراعظم نے عوام سے پرزور اپیل کی کہ عید کے دوران ایس او پیز پر عمل کرنا ہوگا۔ ہم نے احتیاط کر لی تو چوتھی لہر سے ملک کو بچا لیں گے۔

Leave a Reply

Back to top button