دنیا

’بحری جہاز روکے گئے تو شدید ردعمل آئے گا، ایران نے خبردار کردیا‘

امریکی محکمہ قانون کے بیان کے جواب میں ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کے قانونی مشیر محمد دھقان کا کہنا ہے کہ اگر ایران کے بحری جہاز روکے گئے تو ردعمل دیں گے۔

بین الاقوامی خبر رساں کا کہنا ہے کہ رواں ماہ امریکی وزارت قانون کے بیان میں کہا گیا تھا کہ پاسداران انقلاب کے معاشی نیٹ ورک کو توڑنے کے لیے 5 لاکھ بیرل سے زیادہ تیل کو قبضے میں لینے کا اعلان کیا گیا ہے۔

ایرانی صدر کے قانونی مشیر محمد دھقان کا مذکورہ بیان پر رد عمل دیتے ہوئے کہنا تھا کہ ایرانی جہاز کو اگر تحویل میں لیا گیا تو ہم اپنا ردعمل ظاہر کریں گے اور اس حوالے سے قانونی راستہ کھلا ہوا ہے۔

محمد دھقان نے کہا کہ وہ فی الحال یہ تصدیق نہیں کر سکتے کہ امریکی حکام کی جانب سے ایرانی بحری جہاز کو قبضے میں لیا گیا ہے یا نہیں۔

واضح رہے کہ بحیرہ احمر میں گذشتہ برس سے عالمی نقل و حرکت تعطل کا شکار ہے کیوں کہ یمن کے حوثی جنگجو اسرائیل کے ساتھ جاری تنازع کے دوران حماس کی حمایت میں بحری جہازوں کو نشانہ بنانے میں مصروف ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button