HTV Pakistan
بنیادی صفحہ » اردو کتب

اردو کتب

پاؤلو کوئیلہوکے لکھے ہوئے ناول الکیمسٹ کا اردو ترجمہ ”کیمیا گری”

پاؤلو کوئیلہوکے لکھے ہوئے ناول الکیمسٹ نے مقبولیت کے غیر معمولی ریکارڈ قائم کئے ہیں۔ اس کتاب کا دنیا کی 56 زبانوں میں ترجمہ کیا جا چکا ہے۔ یہ کتاب اردو میں بھی ترجمہ کی جا چکی ہے ۔”کیمیا گری” کے نام سے عمر الغزالی نے اس کا ترجمہ کیا ہے اور یہ ترجمہ سینٹر فار ہیومن ایکسی لینس کی ...

مزید پڑھیں »

راجدھانی ایکسپریس، حصہ اول …… ڈاکٹر سلیم خان

انتساب مرنجان مرنج رفیق و دمساز مولانا ارشد سراج الدین مکی صاحب کے نام جن کا اور میرا ساتھ اس کتاب کے چنگو اور منگو جیسا ہے چنگو اور منگو کی اس داستان میں بیان کردہ واقعات اور کردار حقیقی نہیں خیالی ہیں ان کی مشابہت اتفاقی ہے۔ اس لیے کہ وہ کسی کے بھی بارے میں کچھ بھی کہتے ...

مزید پڑھیں »

راجدھانی ایکسپریس، حصہ دوم ……. ڈاکٹر سلیم خان

نوجوان شاہ جی کے شرن میں پہنچے تو وزیر انسانی وسائل نے چین کا سانس لیا اور جئے پور میں موجود اپنے جیوتش کے آشرم کی جانب چل پڑیں۔ شاہ جی نے ایک عرصے کے بعد جب چند نوجوانوں کو اپنے دفتر میں آتے دیکھا تو بہت خوش ہوئے۔ انہوں نے کہا فرمائیے میں آپ کی کیا خدمت کر سکتا ...

مزید پڑھیں »

تابوت، حصہ اول ……. ڈاکٹر سلیم خان

پاروتی یاسر نے ممبئی کے تاج ہوٹل کا نام سن رکھا تھا اس کا ارادہ وہاں رک کر آگے کی منصوبہ بندی کرنا تھا۔ سچ تو یہ ہے کہ سب کچھ اس قدر تیزی کے ساتھ ہو گیا تھا کہ اسے کچھ غور و خوض کا موقع ہی نہیں ملا۔ وہ غصے میں اس قدر باؤلا ہوا جا رہا تھا ...

مزید پڑھیں »

تابوت، حصّہ دوم …….. ڈاکٹر سلیم خان

کیلگیری میں نادرہ کا چہیتا گھوڑا پہنچ چکا تھا۔ یاسر اس انعامی مقابلے کی منصوبہ بندی کر رہا تھا جس سے اس کو مقبولیت حاصل کرنی تھی۔ اخبار میں دیا جانے والا اشتہار تیار کر کے اس نے کیلگیری کے دو بڑے اخبارات کیلگیری پوسٹ اور کناڈا ایج کو ای میل سے روانہ کیا۔ اس کا نرخ دیکھ کر کریڈٹ ...

مزید پڑھیں »

بسیرا ………… نوشاد عادل

شہر خموشاں کے رہنے والے ابدی نیند سو رہے تھے اور رات کے وقت قبرستان کا منظر کیسا ہوتا ہے یہ تو وہی جانتے ہیں جنہیں رات کے وقت قبرستان میں جانے کا اتفاق ہوا ہو، اور وہ بھی اکیلے۔ یہ قبرستان بہت پرانا معلوم دیتا تھا۔ اس کی چار دیواری جگہ جگہ سے ٹوٹ پھوٹ گئی تھی۔ قبرستان کے ...

مزید پڑھیں »

خوف …………… نوشاد عادل

ایک طویل سسکاری اس کے حلق سے خارج ہو گئی، وہ بری طرح ہانپنے لگا۔ اس کی کنپٹی سے پسینے کی بوندیں بہہ بہہ کر ٹھوڑی کے نیچے جمع ہونے لگیں۔ گرمی کی حدت اسے اس حد تک محسوس ہو رہی تھی، جیسے اس کے قریب آگ کا بہت بڑا لاؤ روشن ہو اور وہ اس کی تپش سے بری ...

مزید پڑھیں »

جہانِ حیرت ……… نوشاد عادل

تنویر جلال ایک اونچے ٹیلے پر کھڑا ہوا تھا۔ اس نے ایک بڑے پتھر کی ہموار سطح پر نقشہ پھیلایا تھا، جو تیز ہوا میں پھڑپھڑا رہا تھا، لیکن تنویر نے اس پر ایک ہاتھ رکھا ہوا تھا تاکہ وہ اُڑ نہ جائے اور دوسرے ہاتھ سے اپنے گال کو مسل رہا تھا۔ وہ کسی گہری سوچ میں غرق تھا۔ ...

مزید پڑھیں »

طلسم ہوش ربا …….. نوشاد عادل

خوف اس کے جسم کے ریشے ریشے میں سرایت کر گیا۔ اس مرتبہ اس نے بالکل واضح کسی کے گہرے گہرے سانوں کی آوازیں سنی تھیں۔ اس جنگل میں اس کے علاوہ بھلا اور کون تھا۔ آسیبی ہوا درختوں، جھاڑیوں سے اُلجھ کر خوف ناک آوازیں نکال رہی تھیں۔ اندھیرے میں درختوں کے ہیولے بڑے بڑے بھتنوں کی طرح لگ ...

مزید پڑھیں »

آپا ………. ممتاز مفتی

جب کبھی بیٹھے بٹھائے، مجھے آپا یاد آتی ہے تو میری آنکھوں کے آگے چھوٹا سا بلوری دیا آ جاتا ہے جو نیم لو سے جل رہا ہو۔ مجھے یاد ہے کہ ایک رات ہم سب چپ چاپ باورچی خانے میں بیٹھے تھے۔ میں، آپا اور امی جان، کہ چھوٹا بدو بھاگتا ہوا آیا۔ ان دنوں بدو چھ سات سال ...

مزید پڑھیں »

آخری آدمی …….. انتظار حسین

الیاس اس قریے میں آخری آدمی تھا۔ اس نے عہد کیا تھا کہ معبود کی سوگند میں آدمی کی جون میں پیدا ہوا ہوں اور میں آدمی ہی کی جون میں مروں گا۔ اور اس نے آدمی کی جون میں رہنے کی آخر دم تک کوشش کی۔ اور اس قریے سے تین دن پہلے بندر غائب ہو گئے تھے۔ لوگ ...

مزید پڑھیں »

ارمغان حجاز …… ڈاکٹر علامہ محمد اقبال

نظمیں ابلیس کی مجلس شوری 1936ء ابلیس یہ عناصر کا پرانا کھیل، یہ دنیائے دوں ساکنان عرش اعظم کی تمناؤں کا خوں! اس کی بربادی پہ آج آمادہ ہے وہ کارساز جس نے اس کا نام رکھا تھا جہان کاف و نوں میں نے دکھلایا فرنگی کو ملوکیت کا خواب میں نے توڑا مسجد و دیر و کلیسا کا فسوں ...

مزید پڑھیں »